Khabar Pakhtoon Khwa News

خیبر پختونخواہ

October 10 2018 swat-post-calendar-predictive-elders-of-the-ruling-party-have-become-ancestors-in-the-election-election-waqar-ahmed-khan

ضمنی الیکشن میں حکمران جما عت کے امید وار حوا س با ختہ ہو چکے ہیں ،وقار احمد خان

hello

کبل (بیورو چیف )ضمنی الیکشن حلقہ پی کے متحدہ اپوزیشن کے نامزد امیدوار وقار احمد خان ،خان نواب،تور خان،سابق ایم پی اے رحمت علی خان،رفیع اللہ ،ابراہیم دیولئی،منور شاہ ،نجات خان اور دیگر یونین کونسل ٹال کے علاقہ سیکئی میں ایک عظیم الشان جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ضمنی الیکشن میں حکمران جما عت کے امید وار حوا س با ختہ ہو چکے ہیں الیکشن جیتنے کیلئے طرح طرح کے حر بے استعما ل کر تے ہیں جس میں بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کے نا م پر رقم تقسیم کر نے کیلئے ڈیٹا اکھٹا کر نے خواتین کو الیکشن کے بعد 2000روپے فی کس فراہم کر نے اور گھر وں میں امیدوار کے پر نٹ شدہ کا رڈ تقسیم کر کے بیٹ کو ووٹ دینے کیلئے موقع پر رقم بھی دے رہے ہیں جو سراسر الیکشن کمیشن کے قوانین کے منا فی ہیں انہو ں نے الزام عا ئد کیا کہ اس کے علا وہ عوام کو دھوکہ دینے کیلئے ترقیاتی سکیمو ں کو استعما ل کر کے عوام کی ہمدر دی حا صل کر نے میں لگے ہو ئے ہیں الیکشن کمیشن اس قسم کے صورتحا ل کا راستہ روکنے کیلئے شفاف الیکشن کو یقینی بنا ئے بصورت دیگر متحد ہ اپو زیشن کے تما م جماعتیں راست اقدام اُٹھا نے پر مجبور ہو گی انہو ں نے مزید کہا کہ مو جو دہ حکو مت تین ما ہ کے دور میں ڈالر 111سے بڑھ کر 129پر اگیا جبکہ روز مر ہ اشیا ء پر بھا ری ٹیکس لگنے سے غر یب عوام کی کمر توڑ دی گئی کیا یہی تبدیلی تھی انہو ں نے کہا کہ مہنگا ئی ابھی یہا ں روکی نہیں بلکہ آئی ایم ایف کے شرائط پر روز مرہ اشیا ء مز ید مہنگی ہو گی ، پٹرول ، ڈیزل ، سی این جی سمیت ہر چیز مزید مہنگی اور ڈالر بھی بڑھا یا جا ئیگا جس کے بعد آئی ایم ایف اربو ں ڈالر دیگا اور مہنگائی مز ید بڑھے گی حلقہ پی کے 7کے عوام اس قسم کے صورتحال کا راستہ سختی سے روکنے کیلئے متحدہ اپو زیشن کے امیدوار کو کا میا ب بنا نا ہو گا تا کہ اسمبلی فلور پر اس قسم کے معاملات سے نمٹنے کیلئے بھر پور آواز اٹھا یا جا سکے انہو ں نے کہا کہ 60دن گزر گئے اس کے بعد عمر ان کے 100روزہ پلا ن بھی گزر جا ئیگا لیکن کوئی تبدیلی نہیں آئیگی یہ سب محض مفروضے ہیں انہوں نے واضح کیا کہ 14اکتوبر کو ضمنی الیکشن شفاف بنا نے کیلئے اداروں کو اپنا کر دار ادا کرنا ہو گا نہ کہ عوام الیکشن کے بعد ادروں کے جا نب داری پر اُنگلیا ں اُٹھا ئیں ۔