سوات(سوات پوسٹ ڈاٹ کام)تبدیلی آنہیں رہی تبدیلی اگئی ہے ،سوئی گیس افیس سوات نے وزیر اعظم عمران خان کی احکامات ہوا میں اڑادئے ،ساڑھے بارہ بجے کے بعد سوئی گیس افیس سوات کے دروازے عوام کے لیے بند ،صارفین کو شدید مشکلات کا سامنا،ممبران اسمبلی اور دیگر حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ،بورڈ نئی افیسر میر ویس کے کہنے پر لگایا گیا ،ذرائع ،سوات مینگورہ سوئی گیس افیس کے سامنے گیس انتظامیہ نے بورڈ لگایا ہے جس پر بڑے بڑے حروف میں لکھا گیا ہے کہ عام صارفین صبح نو بجے سے ساڑھے بارہ بجے تک سوئی گیس افیس وزٹ کر سکتے ہیں جبکہ ساڑھے بارہ بجے کے بعد عوام افیس کا وزٹ نہیں کرسکتے۔سوئی گیس افیس ائے ہوئے صارفین شوکت علی سکنہ امان کوٹ ،عباس خان سکنہ چارباغ اور دیگر صارفین نے میڈیا کے نمائندو ں سے بات کرتے ہوئے اپنے فریاد میں کہا کہ راستے میں زیادہ رش کی ساڑھے بارہ سے لیٹ پہنچے تو ہمیں واپس کیا گیا اور گیٹ پر کھڑے سیکورٹی گارڈ نے یہ کہہ کر رخصت کردیا کہ نئی افیسر کے احکامات ہے کے ساڑھے بارہ بجے کے بعد افیس میں صارفین کا داخلہ بند ہے لہذا کل ساڑھے بارہ سے پہلے تشریف لایا جائے ،متاثرہ صارفین نے غم و غصے کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ کس قانون کے تحت ہمیں روکا جارہا ہے وزیر اعظم عمران خان نے خود اعلان کیا تھا کہ نو بجے سے پانچ بجے تک سرکار ی دفاتر کھلے رہے گے مگر سوات سوئی گیس انتظامیہ نے وہی اعلان ہوا میں اڑا دئے جو افسوسناک ہے ،صارفین نے ممبران اسمبلی اور دیگر حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے ۔دوسرے جانب جب انچارج سوات سوئی گیس میر ویس خان سے اس حوالے سے پوچھا گیا تو بار بار رابطہ کر نے کی باوجود بھی رابطہ ممکن نہ ہو سکا جس کی وجہ سے موصف کا موقف سامنے نہیں ایا ۔