Khabar Pakhtoon Khwa News

خیبر پختونخواہ

August 10 2018 swat-post-calendar-assembly-members-will-take-oath-in-khyber-pakhtunkhwa-assembly-assembly-7-constituencies-likely-to-be-vacated

پختونخوا اسمبلی کے 113ارکان حلف اٹھا ئینگے ،7حلقے خالی ہو نے کا امکان

hello

پشاور(سپیشل رپورٹر)عام انتخابات کے بعد خیبر پختونخوا اسمبلی کے پہلے اجلاس میں 113نومنتخب ارکان اسمبلی حلف اٹھائیںگے 124کے ایوان میں9نشستوں پرضمنی انتخابات ہوںگے جبکہ دو نشستوں کا نتیجہ الیکشن کمیشن نے روک دیا ہے۔ 25 جولائی 2018ء کو خیبر پختونخوا اسمبلی کی99جنرل نشستوں میں سے97 پر انتخابات ہوئے جبکہ دو حلقوں پشاور سے پی کے 78اور ڈیرہ اسماعیل خان سے پی کے99میں حصہ لینے والے امیدوار خود کش حملوں میں جاں بحق ہونے کے باعث انتخابات ملتوی ہوگئے تھے۔سابق وزیر اعلیٰ پرویز خٹک نے قومی اسمبلی کی نشست این اے25نوشہرہ کیساتھ ساتھ صوبائی اسمبلی کی دو نشستوں پی کے61اور پی کے64نوشہرہ سے کامیابی حاصل کی تھی وہ دونوں صوبائی سیٹوںسے دستبردارہورہے ہیں،سپیکرصوبائی اسمبلی اسد قیصر نے قومی اسمبلی کی نشست این اے18اور صوبائی اسمبلی کی نشست پی کے44صوابی سے کامیابی حاصل کی تھی ۔ڈاکٹر حیدر علی نے سوات سے قومی اسمبلی کے حلقہ این اے2اور پی کے3سے کامیابی حاصل کی تھی۔ علی امین گنڈا پور نے ڈیرہ اسماعیل خان سے قومی اسمبلی کی نشست این اے 38اور صوبائی اسمبلی کی نشست پی کے97سے کامیابی حاصل کی تھی۔ تحریک انصاف کے ڈاکٹر امجد علی نے سوات سے صوبائی اسمبلی کے دو حلقوں پی کے6اور پی کے7سے کامیابی حاصل تھی۔ سابق وزیر اعلیٰ پرویز خٹک، سپیکر صوبائی اسمبلی اسد قیصر، ڈاکٹر حیدر علی اور علی امین گنڈا پور وفاق میں جانے کی صورت میں صوبائی اسمبلی کی نشستیں چھوڑینگے ۔ ڈاکٹر امجد علی کو ایک نشست چھوڑنا پڑے گی اسی طرح عوامی نیشنل پارٹی کے امیر حیدر خان ہوتی نے قومی اسمبلی کی نشست این اے21مردان اورصوبائی اسمبلی کی نشست پی کے 53 سے کامیابی حاصل کی تھی تاہم امیر حیدر ہوتی وفاق میں جانے کی صورت میں صوبائی اسمبلی کی نشست چھوڑیںگے اور یوں نو منتخب ارکان کو صوبائی اسمبلی کی7نشستیں خالی کرناپڑیںگی جبکہ الیکشن کمیشن نے صوبائی اسمبلی کے دو حلقوں پی کے23شانگلہ اور پی کے38ایبٹ آبادکے نوٹیفیکشن روک رکھے ہیں 13اگست سے قبل اگرنوٹیفیکیشن جاری نہ ہونے کی صورت میں صوبائی اسمبلی کی99جنرل نشستوں میں سے88نو منتخب ارکان حلف اٹھائیںگے خواتین کی مخصوص نشستوں پر منتخب ہو کر آنے والی22اور اقلیتوں کی مخصوص نشستوں پر3ارکان بھی حلف اٹھائیںگے۔